1 مارچ, 2021
2
کاروبارخبریںسائنس و ٹیکنالوجی

ایک بٹ کوائن کی قیمت 90 لاکھ روپے تک پہنچ گئی

ڈیجیٹل کرنسی کے طور پر استعمال ہونے والی کرپٹو کرنسی بٹ کوائن کی قیمت نے ایک بار پھر نیا ریکارڈ قائم کر لیا۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹ کے مطابق ایک بٹ کوائن کی قیمت 90 لاکھ پاکستانی روپے کے قریب پہنچ گئی جس کے بعد بٹ کوائن نے اپنا ریکارڈ توڑ کر نیا سنگِ میل عبور کر لیا۔

دنیا بھر میں کرپٹو کرنسی کے طور پر استعمال ہونے والے ایک بٹ کوائن کی قیمت 89 لاکھ 54 ہزار روپے سے زائد ہو گئی، ایک ہفتے کے دوران ایشیائی تجارت میں بٹ کوائن استعمال کرنے میں تیزی آئی جس کی وجہ سے قیمت میں 18 فیصد اضافہ ہوا۔

رپورٹ کے مطابق سال 2021ء کے آغاز کے بعد سے اب تک بٹ کوائن کی قیمت میں 92 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

معاشی تجزیہ کاروں کے مطابق بٹ کوائن کی قیمت میں اضافے کی وجہ سرمایہ کاروں اور معروف کمپنیوں کا اعتماد ہے کیونکہ ٹیسلا، ماسٹر کارڈ اور بی این وائی میلن جیسی کمپنیاں اب بٹ کوائن سے خرید و فروخت کر رہی ہیں۔

تجزیہ کاروں کا ماننا ہے کہ آنے والے دنوں میں بٹ کوائن کی قیمتوں میں بڑے پیمانے پر اتار چڑھاؤ ہو سکتا ہے، اسی وجہ سے لوگ ابھی بھی اس پر اعتبار نہیں کر رہے۔ ماہرین نے اس اضافے کو غیر مستحکم قرار دیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں معروف امریکی الیکٹرک کار کمپنی ٹیسلا نے ڈیڑھ ارب ڈالر مالیت کے بٹ کوائن خریدے تھے، جس کے بعد بٹ کوائن کی قیموں میں بے پناہ اضافہ ہوا، اور قیمت 38 ہزار ڈالرز سے سیدھا 46 ہزار ڈالرز تک پہنچ گئی تھی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے