28 جنوری, 2021
8
کاروبارپاکستانخبریں

وزیراعظم کے کنسٹرکشن پیکج پر پرُکشش ٹیکس رعایت

فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے وزیراعظم کے اعلان کردہ کنسٹرکشن پیکج کو بہترین اقدام قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ پیکج کے تحت نہایت پرکشش ٹیکس رعایت حاصل ہو سکتی ہیں۔

ایف بی آر سے جاری اعلامیہ کے مطابق کنسٹرکشن پیکج لینڈ بلڈرز اور ڈویلپرز پر لاگو ہوتا ہے پیکج کےدائرہ کار میں نئے اور موجودہ صنعتی و ترقیاتی پراجیکٹس آتےہیں۔

بلڈرز اور ڈویلپرز تعمیرات پر ٹیکس کے فوائدحاصل کرسکتےہیں، پیکج کےتحت ہر مربع فٹ اور مربع گز پر فکسڈ ٹیکس شرح کا اطلاق ہو گا جبکہ کم لاگت ہاؤسنگ پراجیکٹس کیلئے90فیصد ٹیکس میں رعایت ہو گی۔

اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ کمپنیوں کےشیئر ہولڈرز کی سہولت کیلئے منافع آمدن پر کوئی ٹیکس نہیں ہ وگا پیکج کےتحت ودہولڈنگ ٹیکس میں بھی خاطر خواہ چھوٹ دی گئی ہے، بلڈرز اور ڈویلپرز کو31 دسمبر تک ایف بی آر پررجسٹر ہونا پڑے گا۔

ایف بی آر کا کہنا ہے کہ پیکج کےتحت پراجیکٹ کی تکمیل30 ستمبر2022ء تک یقینی بنانا ہو گی رجسٹریشن کیلئے اکاؤنٹ، ملکیتی کاغذات، پلان کی تفصیلات درکارہوں گی۔

ایف بی آرکا سسٹم عارضی رجسٹریشن کی سہولت بھی دے رہا ہے، عارضی رجسٹریشن پراجیکٹس پلان کی منظوری پراسیس میں ہونے والوں کیلئے ہے، بلڈرز، ڈویلپرز،خریداروں کی سہولت کیلئے آن لائن سپورٹ فراہم کی جا رہی ہے 389پراجیکٹس رجسٹرد کیے ہیں جن کی مالیت157 ارب روپے ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے