20 جنوری, 2021
5
خبریںایشیابین الاقوامیجرم و انصاف

ہندو لڑکے کے ساتھ شادی سے انکار پر مسلم لڑکی کو زندہ جلا دیا گیا

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست بہار کے ضلع ویشالی میں 3 افراد نے 20 سالہ مسلم لڑکی گلناز پر پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی۔ گلناز کو اسپتال لے جایا گیا تاہم اُس نے زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ دیا۔

اسپتال لے جاتے ہوئے گلناز نے ویڈیو پیغام میں آگ لگانے کا الزام ستیش نامی نوجوان پر عائد کرتے ہوئے بتایا کہ ستیش بار بار شادی کے لیے دباؤ ڈال رہا تھا اور ہر بار میں نے انکار کر دیا تھا۔

2

گلناز نے مزید بتایا کہ کچرا پھینکنے سے دروازے سے باہر آئی تو ستیش نے اپنے والد اور ایک اور شخص کی مدد سے مجھے گھسیٹ کر لائے اور پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی۔ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔

گلناز کا جسم 75 فیصد تک جل گیا تھا اور وہ دوران علاج دم توڑ گئی جس پر والدین نے بیٹی کی لاش کو سڑک پر رکھ کر احتجاج بھی کیا۔ ملزمان کے بااثر ہونے کے باعث تاحال گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے