0
0
0
دھماکے کے نتیجے میں جاں بحق ہونے والے سول سروس کمیشن کے ملازمین تھے، ترجمان وزارت صحت۔ فوٹو: بشکریہ

شعیب سعید آسی

 افغان دارالحکومت کابل میں وزارت دفاع کے دفتر کے قریب دھماکے کے نتیجے میں 5 افراد ہلاک جبکہ 65 زخمی ہوگئے، دھماکے کے بعد حملہ آوروں اور سیکیورٹی فورسز میں فائرنگ کا بھی تبادلہ ہوا۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے ماطبق کابل میں واقع وزارت دفاع کی عمارت کے قریب زور دار دھماکا ہوا جس کے بعد 3 مسلح افراد نے عمارت میں گھسنے کی کوشش کی۔ 

وزارت داخلہ کے ترجمان نصرت رحیمی کے مطابق خطرناک دھماکے کے بعد 3 اسلحے سے لیس افراد نے عمارت میں گھسنے کی کوشش بھی کی جنہیں افغان سیکیورٹی فورسز نے روکا اور ان کے درمیان دوطرفہ فائرنگ کا بھی تبادلہ ہوا۔

ترجمان وزارت صحت وحید اللہ میعار کا کہنا ہے دھماکے میں جاں بحق ہونے والے افراد سول سروس کمیشن کے ملازمین تھے جبکہ 65 زخمیوں میں 9 بچے بھی شامل ہیں۔

عینی شاہدین کے مطابق دھماکے کی آواز اتنی شدید تھی کہ علاقے میں خوف ہراس پھیل گیا اور ہر طرف دھواں ہی دھواں نظر آرہا تھا۔

افغان فٹ بال فیڈریشن کے ترجمان شافی شاداب نے بتایا کہ دھماکے میں فٹبال فیڈریشن کے چیف یوسف کارگار بھی زخمی ہوئے جب کہ جس مقام پر دھماکا ہوا وہاں وزارت دفاع کے علاوہ سرکاری دفاتر اور افغان فٹبال فیڈریشن کی عمارت بھی ہے۔

دوسری جانب طالبان نے حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ حملے سے عام شہریوں کو زیادہ نقصان نہیں ہوا۔

آپ کا ردعمل؟

پوسٹ کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔


فیس بک کمنٹس