0
0
0
تمام افراد کو انکم ٹیکس آرڈیننس کے تحت اپنی ٹیکس ایبل انکم کےگوشوارے جمع کرانے ہوتے ہیں

شعیب سعید آسی

 ترجمان ایف بی آر کی جانب سے نئے فنانس بل میں نان فائلرز کے حوالے سے وضاحت جاری کی گئی ہے۔

فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کی جانب سے جاری وضاحت میں کہا گیا ہےکہ نان فائلرز کو نئے فنانس بل میں غیر منقولہ جائیداد اور گاڑی کی خرید پر کوئی چھوٹ نہیں دی گئی، حقیقت یہ ہے کہ نئے فنانس بل میں نان فائلرز کی قانونی حیثیت کو ہی ختم کردیا گیا ہے۔

ترجمان ایف بی آر کے مطابق تمام افراد کو انکم ٹیکس آرڈیننس کے تحت اپنی ٹیکس ایبل انکم کےگوشوارے جمع کرانے ہوتے ہیں، کسی بھی بڑی مالی ٹرانزیکشن پر گوشوارے داخل نہ کرنےکی صورت میں مکمل طریقہ کار دسویں شیڈول کے تحت وضع کیا گیا ہے۔

ترجمان نے بتایا کہ ایسے افراد کو نہ صرف ودہولڈنگ اسٹیج پر 100 فیصد زیادہ ٹیکس دینا پڑے گا بلکہ خود طریقہ کار سے ٹیکس کے تعین کے بعدچھپائی گئی آمدن پر جرمانہ اور سزا بھی لاگو ہوگی۔

آپ کا ردعمل؟

پوسٹ کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔


فیس بک کمنٹس