0
0
0
حکومت نے نجی بجلی گھروں سے پیداوار کی کمی کے باعث آئی پی پیز اور پی ایس او کو گردشی قرضوں کی مد میں 55 ارب روپے فوری جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تحریکِ انصاف کی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ آئی پی پیز اور پاکستان اسٹیٹ آئل کو پچپن ارب روپے جاری کیے جائیں تاکہ پرائیویٹ بجلی گھروں سے پیداوار کی کمی کا ازالہ کیا جا سکے۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ انڈی پینڈنٹ پاور پروڈیوسرز (آئی پی پیز) کو 24 ستمبر کو وزارت خزانہ کی جانب سے ادائیگیاں کی جائیں گی۔
خیال رہے کہ آئی پی پیز نے 80 ارب روپے کے واجبات اور بقایہ جات کی عدم ادائیگی پر بجلی کی پیداوار میں 48 فی صد کی کمی کر دی تھی۔
ذرائع کے مطابق 34 ارب روپے وزارت توانائی کو جاری کیے جائیں گے، جب کہ 5 ارب روپے پی ایس اوکو پیر کے روزجاری کیے جائیں گے۔ ذرائع نے مزید کہا ہے کہ 16 ارب روپے پاور ڈویژن کو 30 ستمبر کو جاری کیے جائیں گے جبکہ گردشی قرضوں کی ادائیگی کیلئے حکومت نے 55 ارب روپے اندرون ملک 8 مقامی بینکوں سے قرض لیا ہے۔

آپ کا ردعمل؟

پوسٹ کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔


فیس بک کمنٹس