0
0
0
صہیونی قبضے میں برسوں سے جکڑی مسجد اقصیٰ میں آج ‌میں آج 27 ہزار سے زائد مسلمانوں نے نماز عید الاضحیٰ‌ادا کی ہے. جبکہ اسرائیلی فوج نے مسلسل مسلمانوں کو اس سے روکنے کی کوشش کی .

درجنوں شرپسند صیہونی آبادکاروں نے قبلہ اول پر ریاستی سرپرستی میں دھاوا بولا اور گھنٹوں تک یہودی مذہبی تلمودی گیت گاتے رہے، اس دوران اسلام اور عربوں کے خلاف اشتعال انگیز نعرے بازی بھی کی۔

آج صبح یہودی مذہی جنونی یہودہ گلک کی سربراہی اور صیہونی پولیس کے حفاظتی حصار میں درجنوں شرپسند صیہونی آبادکاروں نے مرکشی دروازے سے داخل ہوکر قبلہ اول پر دھاوا بولا اور مسجد اقصیٰ کے باب الحدید کے احاطے میں بیٹھ کر یہودی مذہی تلمودی گیت گائے ، اس دوران یہودی مذہبی جنونیوں نے قبلہ اول کی بےحرمتی کی اور اسلام مخالف اشتعال انگیز نعرے بازی کی ۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ شرپسند صیہونی آبادکار دو گھنٹوں تک قبلہ اول کی بے حرمتی کرتے رہے اس دوران فلسطینی باشندوں کو مسجد اقصیٰ سے بے دخل کردیا گیا تھا ۔

آپ کا ردعمل؟

پوسٹ کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔


فیس بک کمنٹس