0
1
0
مجھے کیوں نکالا، ووٹ کو عزت دو، خلائی مخلوق کی سازش اور اب میری مدد کے لئے نکلو۔۔ نواز شریف

میاں محمد نواز شریف

میاں محمد نواز شریف

میاں محمد نواز شریف 25 دسمبر 1949ء کو لاہور، پاکستان میں پیدا ہوئے۔ ان کے والد میاں محمد شریف ایک تاجر اور صنعتکار تھے جو 1947ء میں امرتسرسے ہجرت کر کے پاکستان آئے تھے۔ اتفاق گروپ آف انڈسٹریز ان کے خاندان کی ملکیت تھی۔ 

بیگم کلثوم نواز کے ساتھ

بیگم کلثوم نواز کے ساتھ

نواز شریف نے ابتدائی تعلیم سینٹ اینتھونی سکول میں حاصل کی جبکہ گورنمنٹ کالج لاہور سے آرٹس اور بزنس میں گریجویشن کرنے کے بعد کاروبار میں اپنے والد صاحب کا ہاتھ بٹانے لگے۔ 1970ء میں ازدواجی رشتے میں منسلک ہوئے۔
میاں محمد نواز شریف کے 2 بیٹے، حسن نواز ، حسین نواز اور2 بیٹیاں مریم نواز ، اسما نواز ہیں۔

بھائی، عباس شریف کے ساتھ ایک یادگار تصویر

بھائی، عباس شریف کے ساتھ ایک یادگار تصویر

(اس وقت کے) وزیر اعظم ذوالفقار علی بھٹو

(اس وقت کے) وزیر اعظم ذوالفقار علی بھٹو

تاہم جب 1972ء میں وزیر اعظم ذوالفقار علی بھٹو نے نیشنلائیزیشن کی پالیسیوں کو نافذ کیا، تو شریف خاندان کے سٹیل کا کاروبار بھی حکومت کے ہاتھوں میں چلا گیا۔

(اس وقت کے) آمر صدر جنرل ضیا الحق کے ساتھ

(اس وقت کے) آمر صدر جنرل ضیا الحق کے ساتھ

نواز شریف نے 1976ء میں (اس وقت کی) پاکستان مسلم لیگ میں شمولیت اختیار کی تو اس وقت کے انٹر سروسز انٹیلی جنس (آئی ایس آئی) کے سابق ڈائریکٹرجنرل اور پنجاب کے نئے گورنر غلام جیلانی خان نے نواز شریف  کو پنجاب کے وزیر خزانہ کے طورپر تعینات کیا۔
یوں انھیں آمر جنرل ضیا الحق کے دور میں انہیں پہلی بار حکومت میں بطور وزیر خزانہ پنجاب کام کرنے کا موقع ملا۔

(اس وقت کے) آمر صدر جنرل ضیا الحق نے اتفاق گروپ آف انڈسٹریز شریف خاندان کو واپس کر دی۔

(اس وقت کے) آمر صدر جنرل ضیا الحق نے اتفاق گروپ آف انڈسٹریز شریف خاندان کو واپس کر دی۔

نواز شریف نے 1981ء میں، جنرل ضیا الحق کے دور میں پنجاب کے مشاورتی بورڈ میں شمولیت اختیار کی۔ بطور وزیر خزانہ انہوں نے صوبائی ترقی اور خوشحالی کے مالیاتی منصوبوں پر مبنی بجٹ کی تجویز دی۔ جو ان کی مقبولیت کی وجہ بنا۔

جنرل ضیا الحق کے ساتھ گالف کھیلتے ہوئے

جنرل ضیا الحق کے ساتھ گالف کھیلتے ہوئے

1985ء کے انتخابات میں نواز شریف صوبہ پنجاب کے وزیر اعلٰی بن گئے اور اپنے سیاسی کیرئیر کا باقاعدہ آغاز کیا۔

 1985ء کے انتخابات میں نواز شریف صوبہ پنجاب کے وزیر اعلٰی بن گئے اور اپنے سیاسی کیرئیر کا باقاعدہ آغاز کیا۔

1988ء کے انتخابات میں اسلامی جمہوری اتحاد (آئی جی آئی) کے نام سےابھرنے والی پارٹی کے ساتھ انھیں وفاق میں حکومت نہ مل سکی لیکن ایک بار پھر وہ وزیراعلٰی پنجاب بنے۔

متحدہ قومی مومنٹ (ایم کیو ایم) کے بانی الطاف حسین کے ساتھ

متحدہ قومی مومنٹ (ایم کیو ایم) کے بانی الطاف حسین کے ساتھ

اکتوبر 1989ء کو پنجاب کے (اس وقت کے) وزیر اعلٰی نواز شریف،متحدہ قومی مومنٹ کے بانی الطاف حسین کے ساتھ نائن زیرو میں ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں خطاب کرتے ہوئے۔



آپ کا ردعمل؟

پوسٹ کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔


فیس بک کمنٹس